برازیل میں قدرت کا کرشمہ، پیدائشی مردہ بچہ زندہ ہو گیا

برازیل میں قبل از وقت پیدا ہونے والے بچے کو ڈاکٹرز نے مردہ قرار دیا لیکن تدفین کے موقع پر بچے نے سانس لے کر لوگوں کو ورطہ حیرت میں ڈال دیا

دنیا میں ایسے لوگوں کی کمی نہیں جو خدائے واحد کے وجود کے منکر ہیں لیکن پروردگار عالم بھی مختلف اوقات میں اپنی قدرت کے کرشمے دکھا کر لوگوں کو اپنے وجود کا احساس دلاتا رہتا ہے۔

ایسا ہی ایک واقعہ برازیل کے شہر رونڈونیا میں پیش آیا جس نے لوگوں کو حیران کردیا۔

ایک غیر ملکی ویب سائٹ کے مطابق رونڈونیا میں رہائش پذیر اٹھارہ سالہ لڑکی خود کے حاملہ ہونے سے لاعلم تھی جب اسے شدید درد محسوس ہوا تو وہ دو بار اسپتال گئی لیکن دونوں بار ڈاکٹر نے اسے واپس بھیج دیا، دوسری بار گھر پہنچتے ہی اس کی تکلیف ناقابل برداشت ہوگئی اور اس نے گھر میں ہی اپنے بچے کو جنم دیا۔

پیدا ہونے والا بچہ حمل کے پانچویں ماہ میں قبل از وقت پیدا ہوا تھا اور پیدائش کے وقت اس کا وزن صرف ایک کلو تھا، زچگی کے بعد ماں اور بچے کو اسپتال لے جایا گیا جہاں ڈاکٹر نے بچے کو مردہ قرار دے دیا۔

اسپتال فیونرل ڈائریکٹر کو بلایا گیا اور اسے بچے کی تدفین کی ذمے داری سونپی گئی تاہم چند گھنٹوں بعد جب تدفین کی تمام تیاریاں مکمل ہوچکی تھیں تو بچے کے دل نے دھڑکنا شروع کردیا ڈائریکٹر نے بچے کو اپنی بانہوں میں لے کر اس کے دل کی دھڑکن محسوس کی۔

فیونرل ڈائریکٹر بچے کو لے کر فوری طور پر اسپتال پہنچا اور اسے آئی سی یو میں داخل کرایا، بچے کے زندہ ہونے کی خبر پر ماں اور اہلخانہ میں خوشی کی لہر دوڑ گئی۔

واقعے کے بعد اہل خانہ اور فیونرل ہوم نے اسپتال انتظامیہ کے خلاف پولیس میں شکایت درج کرادی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں