انڈونیشیا میں امام مسجد قتل

انڈونیشیا کے صوبے جنوبی سلاویسی میں ایک مسجد کے امام کو قتل کر دیا گیا۔

مقامی میڈیا کے مطابق جنوبی سلاویسی کے علاقے لووو میں ایک شہری فجر کی نماز کے لیے مسجد جا رہا تھا کہ اسے راستے میں 70 سالہ امام محمد یوسف زخمی حالت میں نظر آئے۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق شہری نے فوری طور پر امام مسجد کو اسپتال منتقل کیا تاہم وہ جانبر نہ ہو سکے۔

اس حوالے سے حکام کا کہنا ہے کہ امام مسجد کے سر پر کوئی آہنی چیز ماری گئی جس سے ان کا خون بہت زیادہ مقدار میں بہہ گیا اور یہی ان کی موت کا باعث بنا۔

پولیس حکام کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ ایک مشتبہ شخص کو حراست میں لیکر واقعے کی تحقیقات کا آغاز کر دیا گیا ہے تاہم قتل کی وجوہات کے بارے میں تاحال کچھ معلوم نہیں ہو سکا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں