بھارتی ریاست اترپردیش میں تاجر کے گھر سے 150 کروڑ روپے برامد

نئی دہلی: بھارتی ریاست اترپردیش میں تاجر کے گھر سے 150 کروڑ روپے پرآمد کر لیے گئے۔

تفصیلات کے مطابق بھارتی حکام کا کہنا ہے کہ کانپور میں انکم ٹیکس حکام کے چھاپے میں ایک تاجر پیوش جین کے گھر سے اب تک ڈیڑھ سو کروڑ کی نقد رقم برآمد کی گئی ہے، جب کہ برآمد رقم کی گنتی بدستور جاری ہے۔

جمعے کو سینٹرل بورڈ آف ڈائریکٹ ٹیکس اینڈ کسٹمز (سی بی آئی سی) کے چیئرمین وویک جوہری نے میڈیا کو بتایا کہ کانپور کے ایک تاجر پیوش جین سے منسلک مقامات (گھر، دفتر اور فیکٹریوں) پر ٹیکس چھاپے مارے گئے، جو پرفیوم انڈسٹری کا حصہ ہیں، اور ایک سو پچاس کروڑ روپے سے زیادہ کی نقد رقم برآمد کر لی گئی ہے۔

انھوں نے کہا یہ سی بی آئی سی کی تاریخ میں سب سے بڑی کارروائی ہے، تاہم اس کیس میں اب تک کوئی گرفتاری عمل میں نہیں آئی ہے۔

چھاپے کی تصاویر میں دو بڑی الماریوں میں نقدی کے دو پہاڑ دکھائے گئے ہیں، تمام بنڈل کاغذ کے غلاف میں لپٹے ہوئے تھے اور پیلے ٹیپ سے محفوظ بنائے گئے تھے، ہر تصویر میں 30 سے زیادہ ایسے بنڈل نظر آ رہے ہیں۔

ایک اور تصویر میں سی بی آئی سی، آئی ٹی ڈیپارٹمنٹ اور گڈز اینڈ سروسز ٹیکس (جی ایس ٹی) کے انٹیلی جنس یونٹ کے افسران ایک کمرے کے بیچ میں پھیلی ہوئی پھولوں کی چادر پر بیٹھے نظر آتے ہیں اور ان کے ارد گرد نقدی کے مزید ڈھیر اور تین نوٹ گننے والی مشینیں ہیں۔

اتر پردیش، گجرات اور ممبئی میں متعدد جگہوں پر چھاپے جمعرات کو کانپور میں واقع میسرز تریمورتی فریگرنسز کی ایک فیکٹری سے شروع ہوئے، جو پان مسالا اور دیگر خوشبودار تمباکو کی مصنوعات کا شیکھر برانڈ بناتی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں